ممبئی : گذشتہ ایک ہفتے سے مہاراشٹر میں وزیر اعلی کون بنے گا اس پر تگ و دو جاری  ہے۔ دونوں بی جے پی اور شیوسینا پارٹیوں کے قائدین اپنا وزیر اعلی چاہتے ہیں۔ ثالثوں کے توسط سے دونوں فریق مستقل رابطے میں ہیں۔ بی جے پی نے واضح کیا ہے کہ وہ کسی بھی قیمت پر میعاد کی شراکت اور وزیراعلیٰ کے عہدے کے مطالبے کو قبول نہیں کرے گی۔ اس کے پیش نظر ، دونوں طرف سے ثالثی میں مصروف قائدین ایک بہتر راستہ تلاش کرنے کی کوشش کر رہے ہیں ، لیکن ابھی تک یہ طے نہیں ہوا ہے کہ اس بار مہاراشٹر کا وزیر اعلی کون ہوگا۔ ادھر اداکار انل کپور کو ‘وزیر اعلی’ بنانے کے مطالبے اٹھائے گئے ہیں۔

جی ہاں ، جب بی جے پی اور شیوسینا چیف منسٹر کے عہدے پر راضی نہیں ہورہے ہیں  ، اب وجے گپتا کے نام سے ایک ٹویٹر ہینڈل نے مہاراشٹر کے موجودہ سیاسی صورتحال پر طنز کرتے  ہوئے لکھا ، کہ مہاراشٹرا کے وزیر اعلی کا فیصلہ آنے تک ،اداکار انل کپور کو وزیر اعلی بنایا جانا چاہئے۔ وجئے گپتا نے لکھا ، ‘جب تک مہاراشٹر میں کوئی راستہ نہیں نکلتا ، ہم انیل کپور کو وزیر اعلی کی حیثیت سے دیکھنا چایتے  ہیں۔ اسکرین پر ان کے ایک دن کے وقت  کو پورے ملک نے دیکھا اور سراہا ہے۔ دیویندر فڈ نویس اور ادھو ٹھاکرے کیا سوچ رہے ہیں؟ ‘ وجے نے اپنے ٹویٹ میں انل کپور کی فلم نائک سے منسلک ایک تصویر شیئر کی ہے۔

مہاراشٹرا کی سیاسی صورتحال پر یہ طنزیہ سوشل میڈیا پر زبردست وائرل ہو رہا ہے۔ بہت سارے صارفین اس پر اپنی رائے دے رہے ہیں۔ یہی نہیں بلکہ اداکار انل کپور نے بھی اس ٹویٹ پر اپنا رد عمل دیا ہے۔ وجے کے ٹویٹ کو ریٹویٹ  کرتے ہوئے انیل کپور نے لکھا- ‘میں نائک ہی  ٹھیک ہوں’۔ انیل کپور کے مداح ان کے رد عمل پر اپنی رائے دے رہے ہیں۔

انل کپور کی فلم نائک کے بارے میں بات کریں تو یہ فلم 2001 میں سینما گھروں میں ریلیز ہوئی تھی۔ سیاسی ڈرامہ سے بھرپور ، اس فلم کو شائقین نے خوب پسند کیا۔ فلم نائک میں انیل کپور کے کردار کا نام شیواجی راؤ رکھا گیا ہے اور اس فلم میں وہ ایک دن کے وزیر اعلی کا کردار نبھا ئے تھے ۔ فلم میں انیل کپور نے اداکارہ رانی مکرجی ، امریش پوری ، سوربھ شکلا اور جانی لیور کے ساتھ مرکزی کردار ادا کیا تھا۔ اس فلم کی ہدایتکاری ایس شنکر نے کی تھی۔

انل کپور کے ورک فرنٹ کے بارے میں بات کریں تو  انل کپور  کی اگلی فلم پاگلپنتی ہے۔ اس فلم میں انل کے ساتھ جان ابراہم ، اروشی روتیلا ، ارشد وارثی ، سوربھ شکلا ، الیانا ڈی کروز اور پلکیت سمراٹ بھی ہیں۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here