دہلی: دہلی میں شہریت ترمیمی ایکٹ کے نام پر ہونے والے تشدد میں ہلاکتوں کی تعداد بڑھتی جارہی ہے۔ اب تک 38 افراد اپنی زندگی سے ہاتھ دھو بیٹھے ہیں۔ اسی کے ساتھ ہی عام آدمی پارٹی کے کونسلر طاہر حسین اور دیگر نامعلوم افراد کے خلاف بھی قتل ، آتش زنی اور تشدد کا مقدمہ درج کیا گیا ہے

ملک کے دارالحکومت دہلی میں  تشدد تین دن کے بعد بھلے  رک گیا ہو ، لیکن خوف و ہراس کی فضا اب بھی ہے۔ جمعرات کو دہلی میں ہلاکتوں کی تعداد میں اضافہ ہوا اور اب تک یہ تعداد 38 ہوگئی ہے۔ سی ایم اروند کیجریوال نے معاوضے کا اعلان کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ جاں بحق افراد کے لواحقین کو 10-10 لاکھ روپے دیئے جائیں گے۔ ادھر عام آدمی پارٹی کے کونسلر طاہر حسین پر ایکشن لیا گیا ہے۔ دہلی پولیس نے ان کے گھر کو سیل کردیا ہے اور اس کے خلاف قتل ، آتش زنی اور تشدد کا مقدمہ درج کیا گیا ہے

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here