کانگریس نے اس بل کی سخت مخالفت کی۔ منگل کو جب راجیہ سبھا میں اس بل پر رائے دہی ہورہی تھی تو کانگریس کے ارکان اسمبلی ایوان سے واک آؤٹ ہوگئے۔ تاہم کانگریس کی مخالفت کے باوجود یہ راجیہ سبھا میں  منظور ہو گیا۔

نئی دہلی : اسپیشل پروٹیکشن گروپ (ایس پی جی) ترمیمی بل 2019 لوک سبھا کے بعد راجیہ سبھا میں  پاس  ہو گیا ہے۔ یہ بل صرف وزیر اعظم کو ایس پی جی کا تحفظ فراہم کرے گا، اور ان کے علاوہ کوئی خاص شخص اب اس سکیورٹی کا حقدار نہیں ہوگا۔ بل میں ترمیم کے بعد گاندھی خاندان کا کوئی بھی فرد قانونی طور پر ایس پی جی کے تحفظ میں نہیں رہ سکے گا۔ اسی کے ساتھ ہی یہ تحفظ اب  وزیر اعظم کے عہدے سے ہٹنے  کے 5 سال بعد واپس  لے لیا جائے گا۔

کانگریس نے اس بل کی سخت مخالفت کی۔ کانگریس کے رکن پارلیمنٹ ویویک تنکھا نے مودی حکومت پر گاندھی خاندان کے تحفظ کو کم کرنے کا الزام عائد کیا۔ انہوں نے کہا کہ اندرا اور راجیو گاندھی پہلے ہی قتل ہوچکے ہیں۔ میں خدا سے حفاظت کی دعا کرتا ہوں۔ اگر کچھ ہوتا ہے تو اس کی ذمہ داری کون قبول کرے گا؟ بی کے ہری پرساد نے کہا کہ کیا وزیر داخلہ بغیر سیکیورٹی کے گھوم سکتے ہیں۔

جب راجیہ سبھا میں اس بل پر ووٹنگ  ہو ر ہی تھی تو اس وقت کانگریس کے ممبران اسمبلی ایوان سے واک آؤٹ ہوگئے۔ تاہم  کانگریس کی مخالفت کے باوجود یہ راجیہ سبھا میں  منظور ہو گیا۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here