جن لوگوں نے بجلی کا دو سو یونٹ سے بھی کم خرچ کیا وہ صفر پر آگئے۔
چودہ لاکھ سے زیادہ خاندانوں کا صفر بل۔
دہلی میں 52،27،857 گھریلو بجلی کےکنیکشن ہیں۔

نئی دہلی: ملک کی دارالحکومت دہلی میں ہر چوتھا خاندان مفت بجلی سے فائدہ اٹھا رہا ہے۔ ستمبر کے مہینے میں بجلی کمپنیوں کے اعداد و شمار کے مطابق 28 فیصد گھرانوں کو بجلی مفت مل رہی ہے۔ دہلی میں کل 52،27،857 گھریلو بجلی کے کنیکشن ہیں ، جن میں سے 14،64،270 کنبوں کا بجلی کا بل صفر ہوچکا ہے۔ دراصل1 اگست 2019 کو دہلی کے وزیر اعلی اروند کیجریوال نے مفت بجلی اسکیم کا اعلان کیا۔ اس کے تحت پہلی بار جو دو سو یونٹ سے بھی کم بجلی خرچ کرے گا ، انہیں ایک روپیہ دے کر بجلی کے بل ادا نہیں کرنے ہوں گے۔ اس کا مطلب ہے کہ ان کے لئے بجلی مفت ہوگی۔

ستمبر کے مہینوں کے اعداد و شمار کے مطابق بی ایس ای ایس راجدھانی کے علاقے میں کل 22،03،536 گھریلو کینکشن تھے ، جن میں سے 6،14،910 یعنی 28 فیصد گھرانوں کا صفر بل تھا۔ بی ایس ای ایس یمنا کے علاقے میں کل 13،05،137 گھریلو کینکشن تھے جن میں سے 3،78،993 یعنی 29 فیصد خاندانوں کو مفت بجلی ملی۔ جبکہ ٹاٹا پاور کے علاقے میں مجموعی طور پر 17،19،184 گھریلو بجلی کے کنیکشن تھے جن میں سے 4،70،367 یعنی 27 فیصد گھرانوں کو بل نہیں ملا کیونکہ بجلی کی کھپت ایک ماہ میں 200 یونٹ سے کم رہی ہے۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here